سپریم کورٹ میں اینکر پرسن کیس کی سماعت کے موقع پر نجی ٹی وی چینل کو نوٹس جاری کر دیا گیا۔چیف جسٹس نے ڈاکٹر شاہد مسعود سے کہا کہ آپ نے سنسنی پھیلائی ہے، معافی کا وقت گزر گیا،عوامی سطح پرتسلیم کریں کہ آپ نےغلطی کی ہے۔

چیف جسٹس پاکستان جسٹس ثاقب نثار نے کیس کی سماعت کے دوران شاہد مسعود سے مکالمہ کیا کہ آپ معافی مانگیں پھر دیکھیں گے کیا کرنا ہے، انہوں نے مزید کہا کہ آپ نے رپورٹ چیلنج کرنی ہے تو ہفتے تک کر دیں۔

چیف جسٹس نے کہا کہ رپورٹ میں بتایا گیاہے کہ آپ نے جو کہا وہ درست نہیں، میں نے آپ کی سی ڈی دوبارہ دیکھی ہے آپ نے جو دعوے کیے تھے وہ درست نہیں ہیں۔

چیف جسٹس نے شاہد مسعود سے استفسار کیا کہ آپ نے تو کہا تھا کہ غلط بیانی کروں تو فلاں فلاں ادارے پھانسی پر لٹکا دیں، ہم نے اسی نکتہ نظر سے از خود نوٹس لیا۔

چیف جسٹس نے کہا کہ آپ نے عدالت کے باہر اپنے دعوؤں کو پھر دہرایا، لاہور میں بھی اس کیس کی سماعت ہوئی اور آپ نے استدعا کی کہ نوٹس لیاجائے ۔

سماعت میں چیف جسٹس نے کہا کہ آپ تحریری اعتراضات جمع کرا دیں، 12مارچ کو پھر سماعت ہوگی

SHARE

LEAVE A REPLY