یوم عاشور پر ملک بھر میں سیکیورٹی کے غیر معمولی انتظامات

0
214

یوم عاشور پر ملک بھر میں سیکیورٹی کے غیر معمولی انتظامات کیے گئے ہیں، کراچی میں بھی یوم عاشور کے مرکزی جلوس کی حفاظت کے لیے سخت انتظاما ت کیے گئے ہیں۔

دہشتگردی کے خطرات سے نمٹنے کے لیے محرم کے جلوسوں کی سیکیورٹی کے خاص انتظامات کئے جارہے ہیں،نشتر پارک سے 10محرم کا مرکزی جلوس برآمد ہوگا۔

جلوس نمائش پر علی رضا امام بارگاہ، سی بریز پلازہ، صدر دواخانہ، ایمپریس مارکیٹ، ریگل چوک، تبت سینٹر، ریڈیو پاکستان، لائٹ ہاؤس اور نیو میمن مسجد سے ہوتا ہوا حسینیہ ایرانیاں امام بارگاہ پر اختتا م پزیر ہوگا۔

کراچی بھر میں 25 ہزار سے زائد پولیس اہلکار مجالس اور جلسے جلوسوں کی حفاظت کیلئے تعینات ہیں، لیکن عاشورہ کےجلوس کی حفاظت کیلئے کئی ہزار پولیس اور رینجرز اہلکار اپنی خدمات انجام دیں گے جبکہ پاک آرمی کے دستے بھی اسٹینڈ بائی پر رہیں گے۔

مرکزی جلوس کی جانب آنے والی تمام سڑکوں اور گلیوں کو کنٹینرز، واٹر ٹینکرز اور مسافر بسوں کے ذریعے بند کیا جائے گا جبکہ کچھ اینٹری اور ایگزیٹ پوائنٹس دیئے جائیں گے جن پر واک تھرو گیٹ قائم ہوں گے ۔

جلوس کے راستے میں آنے والی تمام بلند عمارتوں پر اسنائپر تعنیات ہوں گے جبکہ جلوس کی نگرانی کےلیے ڈرون کیمروں اور سی سی ٹی وی کیمروں کی مدد بھی لی جائے گی،اس کے علاوہ ہیلی کاپٹر کے ذریعے فضائی نگرانی بھی کی جائے گی۔

چونکہ یہ جلوس شہر کی اہم شاہراہ ایم اے جناح روڈ سے گزرے گااس لیے اس جانب آنے والے تمام راستے بند ہوں گے،اس لیے شہری متبادل راستے اختیار کرسکتے ہیں۔

ملیر، یونیورسٹی روڈ، گلشن اقبال کے رہائشی ٹاور اور آئی آئی چندریگر آنے کے لیے شاہراہ فیصل کا استعمال کرسکتے ہیں جبکہ سہراب گوٹھ ناظم آباد اور اطراف سے آنے والے، حسن اسکوائر سے شاہراہ فیصل جبکہ تین ہٹی سے نشتر روڈ کا راستہ بھی استعمال کرسکتے ہیں۔

ڈیفنس اور کلفٹن سے ایئرپورٹ جانے والے افراد بھی شاہراہ فیصل کو استعما ل کرتے ہوئے اپنی منزل کی جانب جاسکتے ہیں

SHARE

LEAVE A REPLY