جرمنی کی سوشل ڈیموکریٹک پارٹی نے اپنی 155 سالہ تاریخ میں پہلی مرتبہ ایک خاتون سیاستدان کو بطور سربراہ منتخب کر لیا ہے۔ اتوار کو ہوئی پارٹی ووٹنگ میں تقریبا چھیاسٹھ فیصد ووٹرز نے سینتالیس سالہ آندریا ناہلیس کے حق میں ووٹ دیا۔

آندریا ناہلیس کے انتخاب کو ایس پی ڈی کے مستقبل کے لیے انتہائی اہم قرار دیا جا رہا ہے۔ ناقدین کے مطابق ناہلیس کے لیے اپنی جماعت کو نئی بنیادوں پر کھڑا کرنے کے لیے بہت زیادہ محنت کرنا ہو گی۔

گزشتہ انتخابات میں ایس پی ڈی کی کارکردگی انتہائی مایوس کن رہی تھی۔

SHARE

LEAVE A REPLY