شہباز شریف وزارت عظمیٰ کیلئے ن لیگ کے امیدوار

0
93

مسلم لیگ ن کی طرف سے وزارت عظمیٰ کے لئے امیدوار شہباز شریف ہوں گے،پارٹی کی مجلس عاملہ نے پنجاب کے سابق وزیراعلیٰ اور پارٹی صدر کے حق میں فیصلہ دیدیا ہے۔

اسلام آباد میں مسلم لیگ ن کی مجلس عاملہ کا اجلاس منعقد ہوا ، اجلاس کے بعد میڈیا سے گفتگو میں ن لیگی ترجمان مریم اورنگزیب نے کہا کہ 5 گھنٹے سے زائد جاری رہنے والے مجلس عاملہ اجلاس میں متفقہ طور پر شہباز شریف کو وزارت عظمیٰ کا امیدوار نامزد کیا گیاہے۔

ان کا کہنا تھا کہ مجلس عاملہ اجلاس میںانتخابات میں ہونے والی دھاندلی کی شدید مذمت کی گئی اور مینڈیٹ عمران خان کو دینے کی کوشش کی گئی ہے۔

انہوں نے مزید بتایا کہ اجلاس میں انتخابات کے دوران الیکشن کمیشن کی کوتاہیوں اور نااہلی پر بھی تفصیلی تبادلہ خیال کیا گیا، امیدواروں کو فارم 45 آج تک نہیں دیا گیا اور جہاں فارم 45 دیے گئے اس میں زیادہ تر نتائج کچی پرچیوں پر تھے۔

مریم اورنگزیب نے بتایا کہ لاہور اور پنجاب کے انتخابی نتائج روک لیے گئے اور ایک ہی وقت میں پورے پاکستان میں زرلٹ ٹرانسمیشن سسٹم کو بٹھا دیا گیا تاکہ اس کا استعمال نہ ہو سکے۔

انہوں نے بتایا کہ انتخابی دھاندلی کے خلاف 8 اگست کو ملک کی تمام بڑی سیاسی جماعتوں پر مشتمل پاکستان الائنس فار فری اینڈ فیئر الیکشن کی جانب سے ای سی پی کے دفتر کے باہر احتجاج کیا جائے گااور اس مظاہرے میں ن لیگ کے ملک بھر سے ٹکٹ ہولڈرز شامل ہوں گے۔

انہوں نے مزیدکہا کہ ن لیگ کی مجلس عاملہ کے اجلاس میں میڈیا پر جبری سینسر شپ پر بھی تفصیلی بحث کی گئی اور آزاد صحافت کا گلہ گھونٹنے کی شدید مذمت کی گئی اور فیصلہ کیا گیا کہ آنے والی حکومت کا ڈٹ کر مقابلہ کیا جائےگاتاہم شہباز شریف نے انتخابات سے متعلق وائٹ پیپر جلد تیار کرنے کی ہدایت کی ہے۔

لیگی ترجمان کا کہنا تھا کہ اجلاس میں نیب کے فیصلے کے خلاف قانونی جدوجہد جاری رکھنے پر بھی اتفاق ہوا، نواز شریف، مریم نواز اور کیپٹن صفدر کے خلاف فیصلے کی مذمت بھی کی گئی، عمران خان نے حلقے کھولنے کی بڑھک مار کر پھر یوٹرن لے لیا، پہلے عمران خان جھوٹے تھے اب وہ ووٹ چوربھی بن چکے ہیں۔

پنجاب میں حکومت سازی کےسوال پر مریم اورنگزیب نے کہا کہ پنجاب میں مسلم لیگ ن نمبر گیم میں آگے جانے کی کوشش کر رہی ہے لیکن ہم تحریک انصاف کی طرح آزاد امیدواروں کونہیں خریدیں گے ۔

SHARE

LEAVE A REPLY