بدھ 2 نومبر کو پشاور کی خصوصی عدالت نے عالمی شہرت یافتہ افغان خاتون شربت گل کی درخواست ضمانت مسترد کردی۔

شربت گل کو گذشتہ ماہ 26 اکتوبر کو فیڈرل انویسٹی گیشن ایجنسی (ایف آئی اے) نے جعلی پاکستانی شناختی کارڈ بنانے کے الزام میں حراست میں لیا تھا، جس کے بعد ان کی جانب سے ضمانت کی درخواست دائر کی گئی تھی۔

تاہم عدالت نے شربت گل کی درخواست ضمانت پر مختصر فیصلہ سناتے ہوئے اسے مسترد کردیا۔

گذشتہ روز خصوصی عدالت میں درخواست ضمانت کی سماعت کے دوران افغان خاتون کے وکیل نے بتایا تھا کہ شربت گل اپنے خاندان کی واحد کفیل ہیں اور وہ ہیپاٹائٹس سی کی مریضہ بھی ہیں۔

شربت گل کے وکیل نے عدالت کو مزید بتایا کہ جب ان کو گرفتار کیا گیا اس وقت وہ افغانستان جانے کے لیے راستے میں تھیں۔

اس سے قبل مقامی عدالت کی جانب سے 28 اکتوبر کو شربت گل کو جوڈیشل ریمانڈ پر جیل بھیجا گیا تھا۔

SHARE

LEAVE A REPLY