پاکستان نے 3 میچوں کی سیریز کے پہلے ٹی 20 میں آسٹریلیا کو جیت کےلئے 156 رنز کا ہدف دے دیا،گرین کیپ نے مقررہ 20 اوور میں بابر اعظم کے ناقابل شکست 68 رنز کی بدولت 155رنز بنائے۔

ابوظبی کرکٹ اسٹیڈیم پر کھیلے جارہے میچ میں آسٹریلیاکپتان ایرن فنچ اور سرفراز احمد ٹاس کے لئے میدان میں اترے،آسٹریلوی کپتان نے ٹاس جیت کر پاکستان کو پہلے بیٹنگ کی دعوت دی۔

گرین شرٹس کی طرف سے فخر زمان اور بابر اعظم نے اننگز اوپن کی ،دونوں کھلاڑیوں نے ابتدائی 4 اوورز میں 8 رنز کی اوسط سے بیٹنگ کی اور اسکور 32 رنز تک پہنچادیا۔

پانچویں اوورز کی پہلی گیند پر 2 چوکوں کی مدد سے 14 رنز بنانے والے فخر زمان بڑا شارٹ کھیلنے کی کوشش میں کیچ آئوٹ ہوگئے، یہ وکٹ بلی اسٹین لیک کے حصے میں آئی۔

پاکستان کی دوسری وکٹ 105 کے اسکور پر گری،بابر اعظم اور محمد حفیظ کی 73 رنز کی شراکت بین میک ڈرموٹ نے توڑی۔

محمد حفیظ لمبی شارٹ لگانے کے چکر میں بائونڈی لائن پر کیچ آئوٹ ہوگئے، انہوں نے 2 چھکوں اور اتنے ہی چوکوں کی مدد سے 39 رنز بنائے۔

گرین شرٹس کی تیسری وکٹ 110 کے اسکور پر گرگئی، آصف علی 2 رنز بناکر ایڈم زیمپا کا شکار بن گئے۔

حسین طلعت 17 ویں اوور کی چوتھی گیند پر بڑی شارٹ کھیلنے کی کوشش میں بائونڈی لائن پر کیچ آئوٹ ہوئے،یوں پاکستان کی چوتھی وکٹ گر گئی،وہ صرف 9 رنز بناسکے،ان کی وکٹ اینڈریوٹائی کے حصے میں آئی۔

پاکستان کی پانچویں وکٹ 130 کے اسکور پر گری،اینڈریوٹائی نے فہیم اشرف کو صفر کے اسکور پر پویلین کی راہ دکھائی اور اپنا ہیٹرک چانس پکا کرلیا۔

کپتان سرفراز احمد آئوٹ ہونے والے چھٹے بیٹسمین تھے،وہ بھی بغیر کوئی رنز بنائے میدان چھوڑ گئے،انہیں بلی اسٹین لیک نے ایل بی ڈبلیو آئوٹ کیا۔

گرین شرٹس کی ساتویں وکٹ شاداب خان کی صورت میں گری، وہ بھی اونچا شارٹ لگانے کی کوشش میں کیچ آئوٹ ہوئے،وہ اسٹین لیگ کا تیسرا شکار بن گئے۔

پاکستان کے آٹھویں آئوٹ ہونے والے بیٹسمین عماد وسیم تھے، وہ بھی کیچ آئوٹ ہوئے،وہ 133 کے اسکور پر اینڈریو ٹائی کو وکٹ تھما بیٹھے۔

پاکستان کی اننگز کی خاص بات بابر اعظم کی شاندار بیٹنگ تھی، اوپننگ بیٹسمین نے 68 رنز کی ناقابل شکست اننگز کھیلی،انہوں نے بیٹنگ کے دوران 5 چوکے اور ایک چھکا بھی لگایا۔

آسٹریلیا کی طرف سے اسین لیگ اور اینڈریو ٹائی نے 3،3، ایڈم زیمپا اور میک ڈرموٹ 1،1 وکٹ اپنے نام کی۔

دونوں ٹیموں میں دنیا کے مشہور اور کامیاب ٹی 20 کھلاڑی کھیل رہے ہیں،تاہم گرین شرٹس کو اس بار قابل اعتماد اور سینئر بیٹسمین شعیب ملک کی خدمات دستیاب نہیں،ان کی جگہ کئی ماہ سے فٹنس مسائل سے دوچار عماد وسیم کو شامل کیا گیا ہے،جو رواں برس اپنا پہلا ٹی 20 میچ کھیل رہے ہیں۔

پاکستان کی فائنل الیون میں کپتان سرفراز احمد،فخر زمان،محمد حفیظ،بابر اعظم،حسین طلعت،آصف علی،عماد وسیم،شاداب خان ،فہیم اشرف،حسن علی اور شاہین شاہ آفریدی شامل ہیں۔

آسٹریلیا نے گرین شرٹس سے مقابلے کیلئے جوٹیم اتاری ہے،اس میں کپتان ایرن فنچ،گلین میکس ویل،ڈارسی شارٹ،کرس لن، بین میک ڈرموٹ،ایلکس کیری،ایشٹن ایگر،نیتھن نائیل،اینڈریوٹائی،ایڈم زیمپا اور بلی اسٹین لیک شامل ہیں۔

دونوں ٹیموں کے درمیان سیریز کے باقی 2 میچز 26 اور 28 اکتوبر کو دبئی میں کھیلے جائیں گے۔

پاکستان کو آئی سی سی کی رینکنگ میں پہلی پوزیشن برقرار رکھنےکےلئے ایک میچ میں کامیابی درکار ہے جبکہ تیسرے نمبر پر براجمان آسٹریلیا کو پہلی پوزیشن تک رسائی کےلئے تمام میچز میں فاتح ہونا ہوگا،آسٹریلیا 1-2 سے سیریز جیت کر بھارت کو نمبر دو پوزیشن سے محروم کرسکتا ہے۔

حالیہ دورے میں میزبان پاکستان نے آسٹریلوی ٹیم کو 2 ٹیسٹ میچوں کی سیریز میں ایک صفر سے شکست دی تھی،دوسرے اور آخری میچ میں گرین کیپ نے 373 رنز کے بڑے مارجن سے فتح اپنے نام کی تھی۔

SHARE

LEAVE A REPLY