وزیراعظم نواز شریف نے ورلڈ سلورفلائی ویٹ چمپیئن محمد وسیم کے لیے 3 کروڑ روپے جاری کرنے کی منظوری دے دی۔

ڈان سے گفتگو کرتے ہوئے پاکستان اسپورٹس بورڈ کے ڈائریکٹر جنرل اختر نواز گنجیرا نے کہا کہ ‘حکومت کی جانب سے یہ رقم دو یا تین مہینے پہلے جاری کی گئی تھی اور اس وقت وسیم ملک سے باہر تھے’۔

ان کا کہنا تھا کہ ‘رقم محمد وسیم کی ٹریننگ، کوچ اور دوروں کے لیے ٹکٹ کی مد میں استعمال ہوگی۔

اختر نواز کا کہنا تھا کہ ‘ہم وسیم کے ساتھ بیٹھ کر بات کریں گے اور اجلاس میں رقم کے استعمال کے طریقہ کار کو وضع کیا جائے گا جو وسیم کی خواہش پر ہوگا لیکن حکومت کے لیے تمام معاملات کو یقینی بنانا ہوتا ہے’۔

وفاقی حکومت نے باکسر کو ہرممکنہ سہولت دینے کا بھی یقین دلایا ہے.

انھوں نے کہا کہ ہم جتنی جلدی ہوسکے حکومتی سطح پر ایک اجلاس رکھیں گے جہاں ہم دیکھیں گے کہ اس کو کیسے آگے بڑھائے جائے۔

واضح رہے محمد وسیم نے گزشتہ ہفتے فلپائن کے گیمل میگرامو کو شکست دے کر ورلڈ باکسنگ کونسل سلور فلائی ویٹ کا کامیاب دفاع کیا تھا۔

یہ بھی پڑھیں: وسیم سلور فلائی ویٹ ٹائٹل کے دفاع میں کامیاب
وسیم نے ٹائٹل کے حصول کے بعد حکومت کی جانب سے سردمہری پر شکوہ کرتے ہوئے ان کی سرپرستی کا مطالبہ کیا تھا۔

ان کا کہنا تھا کہ اب آگے بہت بڑا مقابلہ ہوگا جس کے لیے انہیں مالی تعاون کی بہت ضرورت ہے، حالیہ مقابلے میں وہ مالی طور پر کافی پریشان تھے، کیونکہ کوریا کی کمپنیوں نے بھی ان کے لیے تعاون کرنے سے انکار کردیا تھا۔

خیال رہے کہ پاکستان سپر لیگ (پی ایس ایل) کی فرنچائز پشاور زلمی نے محمد وسیم کو اپنا سفیر مقرر کرتے ہوئے انھیں 25 لاکھ روپے انعام دینے کا بھی اعلان کیا تھا۔

SHARE

LEAVE A REPLY