فرانس میں صدارتی انتخابات: ’میکخواں نے لاپین کو شکست دے دی

0
244

پولنگ سے وابستہ اداروں نے فرانس کے اگلے صدر کے طور پر اعتدال پسند امانیئول میکخواں کو فاتح قرار دیا ہے۔ انتہائی دائیں بازو سے تعلق رکھنے والی مدِ مقابل، ماری لو پین سے وہ تقریباً 65.9 فی صد سے جیت رہے ہیں۔

اِنہی غیر سرکاری ذرائع کے مطابق، ماری لوپین کو 34.1 شرح سے ووٹ پڑے۔

اس صدارتی انتخاب کے لیے چلائی گئی مہم کو مبصرین جدید فرانس کی تاریخ کی متنازع ترین مہم تصور کرتے آئے ہیں اور ان کا کہنا ہے کہ اتوار کو ہونے والی رائے شماری کے نتائج کچھ بھی ہوں یہ یورپ کے ساتھ فرانس کے ایک نئے راستے کا آغاز ہو گا۔

انتخابی مہم کے اختتام پر جاری کیے گئے رائے عامہ کے جائزوں میں میکخواں کو 62 فیصد رائے دہندگان کی حمایت حاصل ہونے سے حریف لو پین پر بھاری اکثریت ظاہر کی گئی ہے۔

ابتدائی جائزوں کے مطابق وہ تقریبا 65 فیصد ووٹ حاصل کرنے میں کامیاب ہو جائیں گے۔ فرانسیسی صدارتی الیکشن کی امیدوار مارین لے پین نے اپنی شکست تسلیم کر لی ہے۔ ایگزٹ پولز کے مطابق ماکروں 65 یا 66 فیصد ووٹ حاصل کرنے میں کامیاب ہو جائیں گے۔ ماکروں کی جیت پر جرمن چانسلر انگیلا میرکل کے ترجمان اشٹیفان زائبرٹ نے بھی انہیں مبارکبادی پیغام ارسال کیا ہے

SHARE

LEAVE A REPLY