سیاسی رہنماؤں نے کسانوں پرحکومتی تشدد کی شدید الفاظ میں مذمت کی ہے۔ اپوزیشن لیڈر خورشید شاہ اورپی ٹی آئی رہنما شاہ محمود قریشی نےکسانوں پر شیلنگ اور لاٹھی چارج کا معاملہ قومی اسمبلی میں اٹھانے پر اتفاق کیا ہے۔

اپوزیشن لیڈر خورشید شاہ نے کہا کہ لاٹھیاں کسانوں کو نہیں مجھے پڑی ہیں،کسانوں کا درد اپنے بدن پر محسوس کر رہا ہوں۔

چیئرمین پی ٹی آئی عمران خان نے کہا کہ حکومت کی نظرمیں کسانوں، مزدوروں اور محنت کشوں کی کوئی اہمیت نہیں، اپنے حقوق کیلئے سڑکوں پرنکلنے والے کسانوں پرتشدد آمرانہ سوچ کا مظہرہے،طاقت آزمانے کی بجائے حکومت کسانوں کو ان کے حقوق دے۔

سابق صدر آصف زرداری نے بھی اسلام آباد میں کسانوں پر تشدد کی مذمت کی اور کہا کہ کسانوں کی انتہائی قدم اٹھانے پرمجبورنہ کیا جائے۔انہوں نےکسانوں پرتشدد کے خلاف پارلیمنٹ میں احتجاج کرنے کی ہدایت بھی کی۔

چیئرمین پیپلز پارٹی بلاول بھٹو زرداری نے اسلام آباد پولیس کے تشدد کو آمرانہ اقدام قرار دے دیتے ہئے کہا کہ منتخب پارلیمنٹ کے سامنے احتجاج کرنا کسانوں کو بنیادی جمہوری حق ہے۔

انہوں نے کسانوں کی مکمل حمایت کرتے ہوئے کہا ہے کہ شیلنگ اور لاٹھی چارج حکومت کی کسان دشمن پالیسیوں کا حصہ ہے۔ وزیرداخلہ بتائیں کہ کالعدم تنظیموں کو احتجاج کی اجازت ہے، کسانوں کو کیوں نہیں؟

بلاول بھٹو نے کہا کہ پیپلز پارٹی کے دور میں کسان خوشحال ہوا تھا مگر حکومت نے کاشتکاروں سے خوشیاں تک چھین لی ہیں

SHARE

LEAVE A REPLY