او آئی سی وزرائے خارجہ اجلاس سے خواجہ آصف نے خطاب کرتے ہوئے کہا مقبوضہ بیت المقدس مسلمانوں کا قبلہ اول ہے، اسے اسرائیلی دار الحکومت تسلیم کرنا عالمی قوانین کے منافی ہے۔ وزیر خارجہ نے مطالبہ کیا کہ امریکا فیصلے پر نظرثانی کرے۔
وفاقی وزیر خارجہ خواجہ آصف نے کہا پاکستان کےعوام اور حکومت کےجذبات بھی عالمی برادری کے جذبات میں شامل ہیں، دنیا بھر کے لوگ امریکی فیصلے کی مخالفت کر رہے ہیں۔
انہوں نے کہا ہماری پارلیمنٹ نے متفقہ قراردادوں کے ذریعے امریکی اعلان کی مذمت کی ہے، مقبوضہ بیت المقدس کی حیثیت تبدیل کرنے سے مسلمانوں کے جذبات مجروح ہونگے۔ خواجہ آصف نے خطاب کرتے ہوئے کہا فلسطینی عوام 70 سال سے مظالم کا شکار ہیں، امریکا کا فیصلہ عالمی روایات اور ریاستی طرزعمل کے خلاف ہے۔
وزیر خارجہ خواجہ آصف کا کہنا تھا کہ اوآئی سی امریکی اعلان کیخلاف جنرل اسمبلی اجلاس بلائے اور تمام اسلامی ممالک اس اجلاس میں امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ کے فیصلے کے خلاف مضبوط ردعمل دیں۔
انہوں نے کہا کہ امریکا اپنے فیصلے پر نظر ثانی کرے۔

SHARE

LEAVE A REPLY