لاہور: اورنج ٹرین منصوبے پر کام زوروشور سے جاری

0
156

سپریم کورٹ کی اجازت ملنے کے بعد لاہور میں اورنج ٹرین منصوبے کے مختلف مقامات پر رکا ہوا کام زوروشور سے جاری ہے ، چوبرجی،شالیمار باغ سمیت چند تاریخی مقامات پرتاحال کام شروع نہیں ہوسکا ، منصوبے پر اضافی لاگت کا تعین بھی کیا جارہا ہے۔

آٹھ دسمبر کو سپریم کورٹ کی طرف سے گرین سگنل ملنے کےبعد اورنج میٹرو ٹرین منصوبے پر رکا ہوا کام شروع کر دیا گیا ہے،جی پی او ،انجینئرنگ یونیورسٹی ،بدھوکا آوا،لکشمی چوک اور دیگر مقامات پر تیزی سے کھدائی کی جارہی ہے، وزیر اعلیٰ پنجاب کی ہدایت کےمطابق منصوبے پر تیزی سے کام جاری ہے۔

انجینئرز کا کہنا ہے کہ انہیں 45 دن میں کام مکمل کرنے کا ٹارگٹ دیا گیا ہے۔

اورنج لائن ٹرین منصوبے کی اسٹیئرنگ کمیٹی کے چیئرمین خواجہ احمد حسان کی جانب سے حتمی تاریخ کا اعلان نہیں کیا گیا اور نہ ہی اضافی لاگت کا بتایا جارہا ہے۔

خواجہ احمد حسان نے بتایا کہ شہریوں نے ٹرین منصوبے پر کام کی بحالی پر سکھ کا سانس لیا ہے، ان کا کہنا ہے کہ منصوبہ مکمل ہونے سے ٹریفک جام اور گرد و غبار سے جان چھوٹ جائےگی۔

SHARE

LEAVE A REPLY