اپوزیشن جماعتوں نے چیئرمین نیب کوپارلیمنٹ طلب کرنے کی وزیراعظم کی تجویزکی مخالفت کر دی۔

پاکستان تحریک انصاف کے رہنما اسد عمر نے قومی اسمبلی میں خطاب کرتے ہوئے کہا کہ کیا احتساب کے ادارے کے سربراہ کو بلا کر ان کے کام میں مداخلت کریں گے؟ یہ بہت خطرناک مثال ہوگی، اس کمیٹی کی مخالفت کریں گے۔

اسد عمر نے مزید کہا کہ پاناما پیپرز سامنے آنے کے بعد ہماری درخواست تھی معاملہ پارلیمنٹ میں طے کیا جائے، اُس وقت کے وزیراعظم نوازشریف نے پاناما پیپرزکی تحقیقات کے لیےعدالت کوخط لکھا۔

پیپلزپارٹی کے سید نوید قمر کا کہنا تھا کہ کمیٹی میں شامل ہونے سے متعلق پارٹی سے مشاورت کرنی ہے، ہمیں ایک دن کا وقت دیا جائے

SHARE

LEAVE A REPLY