پاکستان کرکٹ بورڈ کے چیئرمین شہریارخان کا کہنا ہے کہ بھارت کرکٹ کو سیاست کی نذر نہ کرے، بھارت نے معاہدہ کی خلاف ورزی کی ہے۔

اسلام آباد میں میڈیا سے بات کرتے ہوئے پی سی بی چیئرمین شہریار خان نے کہا کہ سیریز کیلئے بھارت سے بھیک نہیں مانگیں گے، معاہدہ پر دو ٹوک بات کریں گے، ایشین کرکٹ کونسل کے اجلاس میں پاکستان ٹھوس موقف اختیار کرے گا۔

شہریار خان نے اعتراف کیا کہ ماضی میں پاکستان نے بھارت کیساتھ سیریز کھیلنے کی شرط پر بگ تھری کی حمایت کی لیکن بھارت اس سے مکر گیا، بھارتی حکومت نے پاکستان کے خلاف سیریز کھیلنے کی اجازت نہیں دی۔

شہریار خان نے مزید کہا کہ مصباح الحق اپنے مستقبل کے حوالے سے فیصلے کیلئے آزاد ہیں تاہم پی سی بی 2018 تک کپتانی جاری رکھنے کی تجویز دے چکی ہے، وہ شاندار فٹنس کی بدولت اگلے چند سالوں تک بین الاقوامی کرکٹ باآسانی کھیل سکتے ہیں، وہ تحمل مزاج ، تعلیم یافتہ اور ذہین ہیں، مصباح کے متبادل کے طور پر چند نام ہیں لیکن فیصلہ کرنے سے پہلے ان کا تفصیلی جائزہ لینے کی ضرورت ہے۔

چیئرمین پی سی بی کا کہنا تھا کہ اظہرعلی اور سرفراز احمد دونوں اچھے ہیں لیکن یہ جب بھی قیادت کرتے ہیں ان کی بیٹنگ خراب ہوتی ہے، آل رائونڈر عماد وسیم بھی امیدوار ہوسکتے ہیں، انھوں نے مشکل اوقات میں دبائو کو قابو کرنے کی قابلیت سے متاثر کیا ہے

SHARE

LEAVE A REPLY