کیا کہا پھر سے کہو
“یاد مجھ کو نہ کرو”

رنگ سب اڑنے لگے
رنگ پھر مجھ میں بھرو

ہاتھ میں تھام لو ہاتھ
چھوڑ دو دنیا،چلو

یہ حکایات جنوں
میں کہوں،تم بھی کہو

مجھ کو رنگنا ہے اگر
اپنے ہی رنگ میں رنگو

کب تلک باتیں فقط
قتل دل کر بھی چکو

اے محبت کے فلک
مجھ پہ بھی سایہ کرو

ثانیہ شیخ

SHARE

LEAVE A REPLY