برطانوی وزیراعظم ٹیریزا مے کا کہنا ہے کہ اس بات کا بہت زیادہ امکان ہے کہ سابق روسی ڈبل ایجنٹ اور اُن کی بیٹی پر برطانوی شہر سالسبری میں قاتلانہ حملے کا ذمہ دار روس ہے۔

سالسبری اعصابی گیس حملے سے متعلق پارلیمان میں سخت بیان دیتے ہوئے برطانوی وزیراعظم کا کہنا تھا کہ حملے میں استعمال ہونے والی اعصابی گیس فوجی گریڈ کی تھی اور اُس کی شناخت نوویچوک کے نام سے ہوئی ہے جسے 1970 کے عشرے میں سوویت یونین میں تیار کیا گیا تھا۔

برطانوی وزیراعظم ٹیریزا مے کا کہنا ہے کہ اس بات کا بہت زیادہ امکان ہے کہ سابق روسی ڈبل ایجنٹ اور اُن کی بیٹی پر برطانوی شہر سالسبری میں قاتلانہ حملے کا ذمہ دار روس ہے۔

سالسبری اعصابی گیس حملے سے متعلق پارلیمان میں سخت بیان دیتے ہوئے برطانوی وزیراعظم کا کہنا تھا کہ حملے میں استعمال ہونے والی اعصابی گیس فوجی گریڈ کی تھی اور اُس کی شناخت نوویچوک کے نام سے ہوئی ہے جسے 1970 کے عشرے میں سوویت یونین میں تیار کیا گیا تھا۔

ٹریزا مے نے بتایا کہ لندن میں تعینات روسی سفیر کو دفتر خارجہ بلا کر وضاحت طلب کی گئی ہے کہ آیا یہ روس کا براہ راست اقدام تھا یا پھر فوجی گریڈ کی یہ نرو گیس کسی اور کے ہاتھ لگ گئی ہے

SHARE

LEAVE A REPLY