بیگم کلثوم نواز لندن میں انتقال کر گئی ہیں

0
568

بیگم کلثوم نواز لندن میں انتقال کر گئی ہیں ۔ گزشتہ رات ان کی حالت ایک بار پھر انتہائی تشویشناک ہو گئی تھی جس کے بعد انہیں ایک مرتبہ پھر وینٹی لیٹر پر منتقل کر دیا گیا تھا۔

بیگم کلثوم نواز کے پھیپھڑوں نے کام چھوڑدیا تھا جس کے بعد ان کی حالت تشویش ناک بتائی جاتی تھی اورانہیں وینٹی لیٹر پر منتقل کر دیا گیاتھا ۔مسلم لیگ ن کے صدر شہباز شریف نے بیگم کلثوم نواز کے انتقال کی تصدیق کر دی ہے اور کہا ہے کہ ان کی میت پاکستان لانے کی کوشش کر رہے ہیں۔

سابق وزیراعلیٰ پنجاب شہباز شریف نے خبر کی تصدیق کرتے ہوئے کہا کہ بیگم کلثوم نواز انتقال کر گئیں، بیگم کلثوم نواز کینسر کے مرض میں لندن میں زیرعلاج تھیں۔

  سابق وزیر اعظم میاں نواز شریف کی اہلیہ کلثوم نواز کشمیری خاندان سے تعلق رکھتی تھیں۔ انہوں نے 1970 میں اسلامیہ کالج سے گریجوایشن کی اور بعد ازاں ایف سی کالج سے اردو ادب میں بی اے کی ڈگری حاصل کی۔

کلثوم نواز کو پاکستان مسلم لیگ ن کی صدر رہنے کا بھی اعزاز حاصل ہوا، کلثوم نواز نے اپنے خاوند سابق وزیر اعظم میاں محمد نواز شریف کی سیاسی میدان میں بے حد مدد کی، اپنی خوش گفتاری اور شخصی اوصاف کی بدولت انہیں مسلم لیگ ن کے علاوہ دیگر سیاسی جماعتوں میں بھی عزت و احترام کی نظر سے دیکھا جاتا تھا۔

بیگم کلثوم نواز لندن کے ہارلےا سٹریٹ کلینک میں زیر علاج تھیں

مسلم لیگ ن کے صدر شہباز شریف نے بیگم کلثوم نواز کے انتقال کی تصدیق کر دی ہے اور کہا ہے کہ ان کی میت پاکستان لانے کی کوشش کر رہے ہیں۔

 بائیس اگست 2017 کو لندن میں سابق وزیر اعظم نواز شریف کی اہلیہ کلثوم نواز کے گلے میں کینسر کی تشخیص ہوئی تھی۔

بعد ازاں یکم ستمبر 2017 کو لندن میں کلثوم نواز کے گلے کی کامیاب سرجری مکمل ہوئی تھی۔

جس کے بعد 20 ستمبر کو سابق وزیر اعظم کی اہلیہ کی لندن میں کینسر کے مرض کی تیسری سرجی ہوئی تھی۔

اس کے بعد کلثوم نواز کی طبیعت کچھ بہتر ہوئی تھی تاہم رواں سال میں ان کی طبیعت ایک مرتبہ پھر خراب ہوگئی تھی۔

رواں سال جون کے مہینے میں کلثوم نواز کو اچانک دل کا دورہ پڑا تھا، جس کے بعد انہیں انتہائی نگہداشت کے وارڈ میں وینٹی لیٹر پر منتقل کردیا گیا۔

سابق وزیراعظم نواز شریف اور ان کی صاحبزادی مریم بیگم کلثوم نواز کی عیادت کرنے اور ان کے ساتھ عید منانے لندن پہنچے تھے۔

SHARE

LEAVE A REPLY