ماہرین نے پہلی مرتبہ نایاب نسل کے پراسرار سمندری مونگے کو کیمرے میں قید کر لیا ہے اور اس کی فوٹیج کو انٹرنیٹ پر جاری کر دیا گیا ہے۔

نایاب نسل کے اس سمندری مونگے کو روبی سی ڈریگن کہا جاتا ہے اور پہلی مرتبہ اسے 2015ء میں میوزیم کے مجموعے میں دیکھا گیا تھا لیکن اب سائنسدانوں نے مغربی آسٹریلیا کے جنوبی ساحلی علاقے میں اس کی ویڈیو ریکارڈ کی ہے۔

یہ فوٹیج کم روشنی والے کیمرے کی مدد سے حاصل کی گئی جس سے سمندری مونگے کا روشن لال رنگ واضح ہوگیا۔ اب تک کسی نے بھی اس سمندری مونگے کی ویڈیو حاصل نہیں کی تھی اور کسی کو یہ بھی معلوم نہیں تھا کہ اس کی تیسری قسم بھی دنیا میں موجود ہے

SHARE

LEAVE A REPLY