برطانوی پارلیمان پرحملہ آور خالد مسعود کون تھا

0
155

لندن۔ سید کوثر کاظمی۔ برطانوی پارلیمان پر دہشت گردی میں ایک اور شخص ہسپتال میں دم توڑ گیا اور پولیس نے 75 سالہ شخص کی ہلاکت کی تصدیق کر دی .

.پارلیمان پر حملے میں ہلاک ہونے والے خالد مسعود کی پڑوسی خاتون کا کہنا ہے کے جب مجھے پتا چلا خالد مسعود نے پارلیمان پر حملہ کیا اور ہلاک ھو گیا مجھے دہچکا لگا .خالد مسعود ایک مکمل فیملی مین تھا جو روزانہ اپنے بچوں کو اسکول چھوڑنے جاتا تھا اور دوسروں کی مدد کرتا تھا .جمپ سٹارٹ سے بہت دفعہ اس نے میری گاڑی سٹارٹ کروانے میں مدد کی

پڑوسی خاتون کا کہنا تھا کہ میں ہمیشہ خالد مسعود کی بیوی سے ملتی تھی بات چیت کرتی تھی .خالد مسعود کو بھی روزانہ دیکھتی تھی یہ ہمارے پڑوس کی ایک نارمل فیملی تھی

خالد مسعود برطانیہ کے علاقے کینٹ میں ایک کرسچن ایفرو کریبین خاندان میں پیدا ہوا تھا .اسکا پہلا نام ایڈرین المس تھا ۔اسلام قبول کرنے سے بہت عرصہ پہلے جب اس کی عمر تقریبا 18 سال تھی یہ مجرمانہ کاروائیوں میں ملوث پایا گیا۔

حملے سے ایک شام پہلے خالد مسعود برطانیہ کے علاقے برائٹن کے پرسٹن پارک ہوٹل میں رہا اور وہیں حملے کی منصوبہ بندی کی .کراے پر کار حاصل کی جس سے بعد میں ویسٹ منسٹر برج پر راہ گیروں کو کچلا

SHARE

LEAVE A REPLY