امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ کا کہنا ہے کہ نیو یارک میں ہونے والے حالیہ حملوں کے بعد مہاجرین کے اہل خانہ کو ملک میں لانے (مائیگریشن) کا نظام اب قابل قبول نہیں۔

ڈونلڈ ٹرمپ نے سماجی رابطے کی ویب سائٹ ٹوئٹر پر اپنے پیغام میں کہا کہ ‘تسلسل کے ساتھ ہجرت کو اب ختم ہونا چاہیے، کچھ لوگ ملک میں آجاتے ہیں اور پھر اپنے پورے خاندان کو بلا لیتے ہیں، جو انتہائی خطرناک ہو سکتا ہے اور یہ قابل قبول نہیں’۔

واضح رہے کہ اہل خانہ کے ساتھ ہجرت کرنے والوں پر یہ پابندی لاکھوں مہاجرین پر اثر انداز ہو سکتی ہے جن میں جنوبی ایشیا کے بھی ہزاروں افراد شامل ہیں۔

امریکی صدر نے اعلان کیا کہ وہ ویزا لاٹری پروگرام کا بھی خاتمہ کرنے جارہے ہیں جس کے تحت امریکا میں مقیم مہاجرین کی تعداد پر قابو پاتے ہوئے ان ممالک کے افراد کو چنا جارہا تھا جہاں 5 سال کے دوران ہجرت کرنے کی شرح انتہائی کم تھی۔

واضح رہے کہ امریکا میں اس پروگرام کو 1990 کے امیگریشن ایکٹ کے تحت لاگو کیا گیا تھا۔

SHARE

LEAVE A REPLY