یومِ علی ؓپرملک بھر میں مجالس عزا اور جلوس

0
41

یوم شہادت حضرت علیؓ کے موقع پرملک بھر میں مجالس عزا برپا اور جلوس برآمد کیے جائیں گے،رینجرز اور پولیس نے کراچی کے علاقوںپٹیل پاڑا اور لسبیلہ میں سرچ آپریشن کر کےمتعدد افرادکو حراست میں لے لیا ۔

لاہور میں جلوس موچی گیٹ سےبرآمد ہوگیا, روایتی راستوں سے ہوتا ہوا شام کربلا گامے شاہ پہنچ کر ختم ہوگا۔

یومِ علی ؓپرکراچی میں سیکیورٹی کے فول پروف انتظامات کوحتمی شکل دے دی گئی،سیکیورٹی کے پیش نظر شہر بھر میں ڈبل سواری پر بھی پابندی عائد ہے۔

کراچی میں یوم علی کا مرکزی جلوس نشتر پارک سے برآمد ہوگا،،جلوس روایتی راستوں سے ہوتا ہوا امام بارگاہ حسینیہ ایرانیاں کھارادر پر اختتام پذیر ہوگا ۔

مرکزی مجلس نشترپارک میں ہوگی ، مجلس خطاب مولانا کمیل مہدوی کریں گے ۔

مجلس کے بعد دوپہر تقریبا ایک بجے نشتر پارک سے جلوس بر آمد ہوگا جس کی قیادت بوتراب اسکاؤٹ کرے گا جبکہ جلوس عزاء کے دیگر راستوں پر عزاداران کی سہولیات کیلئے اسکاؤٹ رابطہ کونسل سمیت 4 ہزار سے زائد رضاکاران رہنمائی کیلئے موجود ہونگے ۔

نماز ظہریں دوران جلوس امامیہ اسٹوڈنٹس آرگنائزیشن کے زیر اہتمام 2 بجے دن امام بارگاہ علی رضا کے سامنے ایم اے جناح روڈ پر مولانا شاہد رضا کاشفی کی زیر اقتداء ادا کی جائے گی۔

بعد از نماز ظہرین امامیہ اسٹوڈنٹس آرگنائزیشن کی جانب سے مظلوم فلسطینی مسلمانوں سے اظہار یکجہتی کیلئے احتجاجی مظاہرہ کیا جائے گا۔

مظاہرے کے اختتام پر جلوس عزاء اپنے مقررہ راستوں سی بریز ،صدر دواخانہ ،ایمپریس مارکیٹ،ریگل چوک،تبت سینٹر،ریڈیو پاکستان،بولٹن مارکیٹ،لائٹ ہاوس موڑ سے ہوتا ہوا کھارادر سے حسینیہ ایرانیان پر اختتام پذیر ہوگا۔

ذرائع کے مطابق ایم اے جناح روڈ پر جلوس کی گزر گاہوں کو کنٹینرز رکھ کر سیل کر دیا گیا، جلوس کے راستے میں آنے والی دکا نیں بھی سیل کر دی گئیں۔

ترجمان سندھ پولیس کے مطابق کراچی میں یوم شہادت حضرت علی کے مرکزی جلوس کی سیکیورٹی پر پانچ ہزار پانچ سو بہتر جوانوں کومامورکیاگیاہےجبکہ جلوس برآمد ہونے سے قبل بم ڈسپوزل اسکواڈ سے گزرگاہوں کی مکمل سوئپنگ کی جائے گی۔

جلوس برآمد ہونے کے بعد سی سی ٹی وی کیمروں سے مانیٹرنگ کےساتھ ساتھ فزائی نگرانی بھی جاری رہے گی جبکہ ماہرنشانہ باز بلند وبالاعمارتوں پرتعینات ہونگی۔پولیس کے علاوہ رینجرز کی نفری جلوس کی سیکیورٹی پرمامور ہوگی۔

آئی جی سندھ اے ڈی خواجہ کا کہنا تھا کہ جلوسوں کے راستوں پر اسکیننگ کا کام شروع کردیا ہے اور پورے جلوس کا راستہ سیل ہوگا۔

انہوں نے بریفنگ میں بتایا کہ جلوس کے راستوں پر803 عمارتیں ہیں جن کی پولیس اور رینجرز نگرانی کرے گی۔

SHARE

LEAVE A REPLY